جمعہ, ستمبر 22, 2006

پوپ کا بیان اور مشرف کو دھمکی

دنیا میں جب بھی کہیں اسلام کے خلاف بات ہوتی ہے تو پاکستان ہی ایک ایسا واحد ملک ہے جس میں اس پر ردِعمل کی توقع فوراً کی جاسکتی ہے چاہے وہ ردِ عمل حقیقی ہو یادکھاوے کا ،
اگر تو ردِ عمل حقیقی ہو تو پھر یہ لہر دور تک جاتی ہے اور اس میں بہت کچھ بہہ بھی جاتا ہے اور اگر یہ ردِعمل دکھاوے کا ہو تو کچھ لے دے کر معاملہ نبٹ جاتا ہے۔
ابھی پچھلے دنوں عیسائیوں کے روحانی پیشوا پوپ کی طرف سے ایک بیان دیا گیا جس میں جہاد کی مذمت کے ساتھ ساتھ اسلام کے بارے میں بھی گستاخانہ الفاظ ادا کئے گئے ، جس پر پوری اسلامی دنیا میں اس کی مذمت کی گئی اور ساتھ ساتھ مظاہروں کا سلسلہ بھی زوروشور سے شروع ہوگیا۔
پوپ سے اپنا بیان واپس لینے کو کہا گیا، مظاہروں کی شدت دیکھتے ہوئے پوپ نے پینترا بدلا اور اپنے بیان پر معافی مانگی۔پاکستان میں مذہبی تنظیموں نے اس معافی کو ناقابلِ قبول قرار دیا اور کہا کہ پوپ کو اپنا بیان واپس لینا چاہئے۔
اب جبکہ پاکستان میں آہستہ آہستہ ان مظاہروں کی شدت میں اضافہ ہو رہا تھا تو ہمارے صدر محترم نے امریکہ سے ایک تازہ بیان داغ دیا ہے اور کہا ہے کہ امریکہ نے انھیں دھمکی دی تھی کہ اگر دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستان نے اس کا ساتھ نہ دیا تو پاکستان کو کھنڈر بنا دیا جائے گا ۔
دیکھا جائے تو یہ کوئی خلافِ بعید بات بھی نہ تھی ، بالکل امریکہ دھمکی دے سکتا تھا۔مگر بابے شیدے کو ایک بات کی سمجھ نہیں آئی کہ یہ گڑے مردے اُٹھانے کا یہ کون سا وقت تھا۔
بابا عیدو کچھ اور ہی کہتا ہے ، کہتا ہے کہ ، یہ سب پاکستانی مذہبی جماعتوں کو پوپ کے بیان سے باہر نکالنے کی ایک چال ہے تاکہ ان کا دھیان کسی اور طرف لگا دیا جائے۔بابا عیدو یہ بھی کہتا ہے کہ دیکھنا اب سارے مذہبی لیڈر پوپ کو بھول کر صدر مشرف کی طرف لٹھ لے کر دوڑ پڑیں گے اور کان پڑی آواز بھی سنائی نہ دے گی ، جب تک کہ کوئی اور شوشہ نہیں چھوڑ دیا جاتا۔

1 تبصرہ:

  1. بے غیرت کہیں سے لتّر کها کر آیا تها که کسی نے پوچها
    اوئے سنا هے تمہیں لتّر پڑے هیں؟
    بے غیرت کہنے لگا '' نئیں اوے وه تو چهوٹي چهوٹی جتّیاں تهیں ـ

    غیرت مند کو چلو بهر پانی بهی بہت ہوتا هے ڈوب مرنے کے لئے ـ

    یه مشرف صاحب اب ایسی باتیں بتا کر کیا کہنا چاهتے ہیں که لوگو مجھ پر ترس کهاؤ ـ

    جواب دیںحذف کریں