بدھ, مارچ 29, 2017

شاعروں پر ظلم بند کریں

شاعری کیا ہے ؟ ایک احساس ۔۔۔۔ ایسا احساس جسے الفاظ میں ڈھالا جاتا ہے
شاعری کو الفاظ میں ڈھالنا ایک فن ہے اور یہ فن ایک خداداد صلاحیت ہے ۔۔۔۔
دوسرے درجے کی شاعری میں احساس کو الفاظ میں بنایا جاتا ہے جسے ہم تخلیقی شاعری کہہ سکتے ہیں
کئی شاعروں نے چرس کے نشے میں ڈوب کر لکھا ۔۔۔۔ اور جو لکھا ۔۔ وہ یادگار تھا
کئی شاعروں نے شراب کے نشے میں کمال کے شعر کہہ ڈالے ۔۔۔اس وقت ان کو بھی نہیں پتہ چلا کہ کس کی شان میں کہہ ڈالے
کئی شاعروں نے پاخانے میں بیٹھے کمال کی غزلیں تخلیق کر ڈالیں
اب جو شعر کہے جاتے ہیں وہ شاعر کی مختلف ذہنی کفیت اور احساس کا عکاس ہوتے ہیں ۔۔۔تب شاعر کے ذہن میں پتہ نہیں کیا تصور ہوتا ہے یا پتا نہی اس نے وہ کس تناظر میں کہے ہوتے ہیں ۔۔۔
اب انہیں اشعار کو خود پر فٹ کر کے اپنے تئیں موقع کی مناسبت سے میدان میں پھینک کر داد وصول کرنا ظلم نہیں تو اور کیا ہے ؟

کوئی تبصرے نہیں:

ایک تبصرہ شائع کریں